UA-162836014-1
Published 3 years ago in Sufi Kalam

Ek Shajar hai Baqi | Ghulam Raza Shakir | New Sufi kalam

  • 174
  • 1
  • 0
  • 3
  • 0
  • 0

Fsee production is presenting you new sufi kalam " Ek Shajar hai Baqi " which is written by Ghulam Raza Shakir and said by Sami Kanwal . This sufi kalam gives us lesson in every word and bring us in sufi world .please letus know in comment section how this kalam was

Lyrics

جانا آہوں میں میری کچھ تو اثر ہے باقی
اجڑے گلشن میں ابھی ایک شجر ہے باقی
وہ تو میرا ہے فقط میرا ہے ہر جائی نہیں
خوف اک دل میں میرے پھر بھی مگر ہے باقی
پاس منزل کے سمجھتا رہا خود کو لیکن
سوچتا ہوں کہ ابھی شام سفر ہے باقی
میری بستی کے سبھی لوگ منافق ہیں مگر
مطمئعن ہوں کہ ابھی ایک تو گھر ہے باقی
عشق میں چین کبھی کس کا ملا ہے شاکر
اور انجانا سا اک درد جگر ہے باقی
عاشق بکری مشعوق قصائی
میں میں کردی کوہی
جیویں جیویں میں میں کردی
تیوں تیوں موئی موئی
بلھیا شوہ عنایت کر کے
شوق شراباں دتا
بھلا ہویا دُوروں چُھٹے
نیڑے آن لدھوئی
تم شب کے اندھیروں سے ذرا پوچھنا صابر
آخر یہ اجالوں کو چھپاۓ گا کہان تک

::
/ ::

Queue

Clear